The Latest

وحدت نیوز(کوئٹہ)مجلس وحدت مسلمین کے رہنماء اور امام جمعہ کوئٹہ علامہ علی حسنین حسینی نے کہا ہے کہ کوئٹہ میں شیعہ ہزارہ قوم کے خلاف دہشتگردی میں ملوث عناصر کو آج تک سزائیں نہیں ملیں۔ ملک و قوم کی خدمت کا جذبہ رکھنے والے سینکڑوں افراد شہید ہو گئے، لیکن ان کے قاتلوں کو گرفتار نہیں کیا جا سکا ہے۔ ان خیالات کا اظہار ایم ڈبلیو ایم رہنماء علامہ علی حسنین حسینی نے آٹھ جون 2003 کو سانحہ سریاب روڈ کے پولیس کیڈٹ کے شہداء کی برسی کے موقع پر اپنے جاری کردہ بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ پولیس کیڈٹ کے شہداء کی یاد آج تک ہمارے دلوں میں تازہ ہے۔ جن میں اس ملک و قوم کی خدمت کا بھرپور جذبہ تھا۔ تاہم دہشتگردوں نے ان پر حملہ کرکے وطن عزیز کو 12 عظیم پسروں سے محروم کر دیا۔

علامہ علی حسنین نے کہا کہ بیس سال تک ہماری قوم کا قتل عام ہوا۔ پاکستان کا نام روشن کرنے والے پروفیشنلز اور اہم شخصیات کو نشانہ بنایا گیا۔ دہشت گردوں نے خواتین اور بچوں کو بھی نہیں بخشا اور محلوں پر حملے کئے۔ تاہم ہماری حفاظت کا ذمہ اٹھانے والے انہیں کیفر کردار تک پہنچانے میں ناکام ہو گئے۔ انہوں نے شیعہ ہزارہ قوم کے قتل عام میں ملوث دہشت گردوں کی گرفتاری کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ہر سانحہ کے بعد تحقیقاتی کمیشنز بنائے گئے۔ ہم سے انصاف کے وعدے کئے گئے، مگر انصاف نہیں ملا۔ ہم آج بھی اپنے قاتلوں کی گرفتاری اور انہیں کیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ انہوں نے آخر میں شہدائے پولیس کیڈٹ کے اعلیٰ درجات کیلئے دعا کی۔

وحدت نیوز(کوئٹہ)مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری تنظیم سازی علامہ مقصود علی ڈومکی نے سابق صوبائی وزیر چیف آف بیرک نواب محمد خان شاہوانی سے کوئٹہ میں ملاقات کی۔ جس میں بلوچستان کی صورتحال قبائلی معاملات پر گفتگو کی گئی۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے علامہ مقصود علی ڈومکی نے کہا کہ فارم 47 پر قائم حکومت عوام کی نمائندہ ہے نہ ہی اسے عوام کا اعتماد حاصل ہے۔ آئین پاکستان صاف و شفاف انتخابات کا تقاضا کرتا ہے۔ بلوچستان کے عوام کے مینڈیٹ کو ٹھکرا کر جعلی قیادت مسلط کی گئی ہے۔ بلوچستان کی محب وطن قوتیں بلوچستان میں دیرپا امن و ترقی چاہتی ہیں۔ بلوچستان کی محرومی اور پسماندگی کا خاتمہ ضروری ہے۔

نواب محمد خان شاہوانی نے اس موقع پر کہا کہ بلوچستان میں عوام کے منتخب نمائندوں کو ہرا کر مصنوعی جعلی مینڈیٹ کو عوام پر مسلط کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بلوچستان کا مسئلہ سنجیدہ کوششوں سے حل ہو سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالمالک بلوچ نے مسئلہ بلوچستان کو مذاکرات کے ذریعے حل کرنے کی سنجیدہ کوشش کی۔ جس کمیٹی کا میں حصہ تھا نے خان آف قلات سے بھی لندن میں ملاقات کی۔ مگر بعض مقتدر حلقوں نے اسے سبوتاژ کر دیا۔ نواب اکبر خان بگٹی کے قتل سے بلوچستان کے مسئلے کو مزید الجھا دیا گیا اور مسئلہ بلوچستان کا حل فقط بامقصد مذاکرات کے ذریعے ممکن ہے۔

وحدت نیوز(کراچی) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کراچی ڈویژن کے صدر علامہ شیخ محمد صادق جعفری نے جامع مسجد حیدری اورنگی ٹاؤن کے باہر مجلس وحدت مسلمین ضلع غربی کی جانب سے اورنگی ٹاؤن میں بنیادی سہولیات کی عدم فراہمی، کے الیکٹرک کی جانب سے غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ، اورنگی ٹاؤن میں خستہ حال سڑکوں، پینے کے صاف پانی کی عدم فراہمی، سیوریج اور صفائی ستھرائی نہ ہونے کے خلاف احتجاجی مظاہرے کا انعقاد کیا گیا۔ مظاہرے میں ڈویژنل رہنماء سید کلیم رضا، ضلع ویسٹ کے صدر میثم عباس، ضلعی کابینہ و یونٹ کے ذمہ داران اور عوام کی بڑی تعداد میں شرکت کی۔

اپنے خطاب میں علامہ صادق جعفری نے کہا کہ سندھ حکومت سیاسی و جماعتی مفادات سے بالاتر ہوکر کراچی سمیت صوبے بھر کی عوام کو درپیش بحرانوں اور مسائل کو حل کرنے کیلئے جدوجہد کریں، کراچی سمیت صوبے میں اس وقت پانی، لوڈشیڈنگ، بنیادی سہولیات کی عدم فراہمی، صحت و صفائی ستھرائی کی تباہ کن صورتحال، بے روزگاری سمیت کئی بحرانوں اور مسائل کا سامنا ہے، پیپلز پارٹی اور اسکی سندھ حکومت سے لیکر تمام سیاسی و مذہبی جماعتیں بحرانوں اور مسائل کو حل کرنے کے بجائے صرف سیاست کرتی نظر آ رہی ہیں ۔

وحدت نیوز(ژوب)مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری تنظیم سازی علامہ مقصود علی ڈومکی، صوبائی صدر ایم ڈبلیو ایم بلوچستان علامہ سید ظفر عباس شمسی اور صوبائی جنرل سیکریٹری علامہ سہیل اکبر شیرازی نے بلوچستان کے ضلع ژوب کا ایک روزہ تنظیمی دورہ کیا۔ اس موقع پر مرکزی امام بارگاہ ژوب میں ضلعی آرگنائزنگ کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے علامہ مقصود علی ڈومکی نے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین نے کشمیر سے کراچی تک پوری ملت کو ایک لڑی میں پرویا ہے۔ تنظیم کو منتشر قوتوں کو متحد اور عظیم الٰہی و اسلامی اہداف کے لئے متحرک کرنے کے لئے ضروری ہے۔

علامہ سید ظفر عباس شمسی نے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین بلوچستان کے 14 اضلاع میں فعالیت کر رہی ہے۔ بلوچستان کے عوامی مسائل کو اجاگر کرنے کے ساتھ ساتھ ملک میں آئین و قانون کی بالادستی کے لئے ہم تحریک تحفظ آئین پاکستان کے پلیٹ فارم سے جدوجہد کر رہے ہیں۔ اس موقع پر علامہ سہیل اکبر شیرازی نے کہا کہ قائد وحدت علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی قیادت میں ایم ڈبلیو ایم ملک میں اتحاد بین المسلمین کے فروغ کے لئے مصروف عمل ہے۔ اس موقع پر ضلعی آرگنائزنگ کمیٹی کے ارکان توقیر حسین آفاق، احمد رفیق احمد اور دیگر نے ژوب کی عمومی صورتحال اور تنظیمی فعالیت کے حوالے سے گفتگو کی۔

وحدت نیوز(ملتان)وحدت یوتھ پاکستان کے مرکزی نائب صدر راجہ مصطفی حیدر نے دورہ ملتان کے دوران مسجد و امام بارگاہ آل عباء گارڈ ن ٹائون کا دورہ کیا۔ اس موقع پر ڈویژنل صدر رانا تیمور حسن بھی ان کے ہمراہ تھے، راجہ مصطفی حیدر نے نوجوانوں اور مومنین سے ملاقات کی اور ان سے خطاب بھی کیا۔ اُنہوں نے اپنے خطاب میں نوجوانوں کی ذمہ داریوں پر بات کرتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں کی آج ماضی سے زیادہ ذمہ داریاں ہیں، جوں جوں استعمار اور دشمن کے حربے بڑھ رہے ہیں اسی طرح نوجوانوں کی ذمہ داریوں میں بھی اضافہ ہورہا ہے، کیونکہ استعمار اس وقت جتنا نوجوانوں کو اپنی طرف مائل کرنے پر کام کررہا ہے اتنا کسی پر نہیں کررہا، ہمیں اپنے نوجوانوں کی تربیت اس انداز میں کرنی ہے کہ وہ امام وقت کے سچے سپاہی ثابت ہوں۔ اس موقع پر سینیئر تنظیمی رہنما غضنفر جعفری اور دیگر موجود تھے۔

وحدت نیوز(ملتان) وحدت یوتھ پاکستان کے مرکزی نائب صدر راجہ مصطفی حیدر نے اپنے دورہ ملتان کے دوران وحدت یوتھ ملتان کی ڈویژنل کابینہ سے ملاقات کی، اس موقع پر ڈویژنل صدر تیمور حسن اور دیگر کابینہ کے افراد بھی موجود تھے۔ راجہ مصطفی حیدر نے نوجوانوں سے گفتگو کرتے ہوئے معاشرے میں نوجوانوں کی اہمیت پر زور دیا، اُنہوں نے کہا کہ کسی بھی معاشرے کی طاقت اور اُس کا مستقبل اُس کی نوجوان نسل ہوتی ہے، ضرورت اس امر کی ہے کہ ہم اپنے جوانوں کی بہتر تربیت، بہتر روزگار اور ایک اچھا پاکستانی شہری بننے کے لیے کام کریں، نوجوان کسی بھی قوم کا اثاثہ ہوتے ہیں ہمارے جوانوں میں ٹیلنٹ بہت زیادہ ہے لیکن بدقسمتی سے اُنہیں مواقع میسر نہیں ہیں۔ اس موقع پر ڈویژںل کابینہ کے علاوہ دیگر ممبران بھی موجود تھے۔

وحدت نیوز(لاہور) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی کوآرڈینیٹر برائے امور خطباءو ذاکرین علامہ سید حسن رضا ہمدانی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ ذاکرین و زکر امام حسین علیہ السلام کو درپیش مشکلات کے حوالے سےاور آئندہ کے لائحہ عمل کی تشکیل کیلئے ذاکرین و خطبا کانفرنس کا انعقاد کیا جارہا ہے ۔

 انہوںنے کہا کہ ذاکرین و خطبا کانفرنس  سربراہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان سینیٹر علامہ راجہ ناصرعباس جعفری کی زیر صدارت قومی مرکز شادمان لاہور میں بروز پیر یکم جولائی 2024 بوقت شام 4 بجے منعقد ہوگی۔

علامہ حسن رضا ہمدانی کا کہنا ہے کہ محرم الحرام کے آغاز سے قبل اس ذاکرین و خطبا کانفرنس  میں ملک بھر سے جید خطباء وذاکرین شریک ہوں گے اور اپنا اپنا نقطہ نظر پیش کریں گے ۔

وحدت نیوز(سکردو) چیئرمین مجلس وحدت مسلمین پاکستان علامہ راجہ ناصر عباس جعفری کی سینیٹر منتخب ہونے کے بعد پہلی بار سکردو آمد، سکردو انٹرنیشنل ائیرپورٹ پر علماء کرام اور کارکنان کی جانب سے والہانہ استقبال۔

 استقبالیہ قافلے کا اعلان نہ ہونے کے باوجود ہزاروں افراد کی شرکت۔شہر کے تمام چوکوں اور چوراہوں پر عوام اور جوانوں کی جانب سےشاندار استقبال، جگہ جگہ گل پاشی کی گئی۔

 سکردو کی فضاء اسلامی شعار اور قائد وحدت کے فلک شگاف نعروں سے گونج اٹھی۔عوام کی جانب سے شہر کے راستوں پر پھول کی پتیاں بکھیر دی گئیں۔ شہر بھر کی تمام شاہراہوںپر قائد وحدت کی آمد پر خیرمقدمی بینرز اور بل بورڈ نمایاں تھے۔

 عوام روایتی یاک اور تحائف کے ساتھ محبت بھرے جذبات کا اظہار کرتے رہے۔جگہ جگہ استقبال کے سبب منٹوں کا راستہ گھنٹوں میں بدل گیا۔ ایم ڈبلیوایم کے مرکزی رہنما علامہ اعجاز بہشتی اور ملک اقرار حسین بھی ان کے ہمراہ موجود ہیں۔

قائد وحدت کا استقبالیہ قافلہ ہزاروں کارکنوں کے ہمراہ ایم ڈبلیو ایم سیکریٹریٹ کی جانب رواں دواں۔علامہ راجہ ناصر جعفری اور مجاہد ملت آغا علی رضوی نے استقبال کرنے والوں کا شکریہ ادا کیا گیا۔

واضح رہے کہ سینیٹر علامہ راجہ ناصرعباس جعفری تین روزہ دورے پر سکردو پہنچے ہیں ، یہاں وہ مختلف مذہبی وسیاسی شخصیات سے ملاقاتوں سمیت 9 جو ن کو یاد شہداء پر عوامی اجتماع سے خطاب بھی کریں گے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد)مجلس وحدت مسلمین پاکستان کےسربراہ سینیٹر علامہ راجہ ناصرعباس جعفری نے ایم ڈبلیوایم کے زیر اہتمام عالم اسلام کے نامور رہنما، مظلومین غزہ کی توانا آواز ،اتحاد بین المسلمین کےعلمبردار اور ہمسایہ برادر ملک ایران کے صدرشہید آیت اللہ ڈاکٹر سید ابراہیم رئیسی اور ان کے رفقاء کی یاد میں ایک تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ  صدر ابراہیم رئیسی دنیا کے رہنماؤں کے لیے نمونہ عمل تھے، وہ انتہائی زاہد اور سادہ و محنتی انسان تھے، وہ یتیمی، غریبی اور مشکل ترین زندگی کے باوجود محنت سے آگے آئے اور اپنی عوام کی خدمت کی، عوامی خدمت کی بدولت وہ ایرانی عوام کے ہردلعزیز رہنما تھے، جن پر کروڑوں لوگ غمزدہ تھے، مزدوروں اور غریبوں کا ہمنوا و دل جوئی کرنے والے پڑھے لکھے حکیم انسان تھے۔

شہید ابراھیم رئیسی نے نا صرف مقاومتی میدان میں اسلامی انقلاب کا دفاع کیا بلکہ سفارتی محاذ پر بھی ڈٹ کر استعماری سازشوں کا مقابلہ کیا۔ انہوں نے خطے میں عالمی استکباری منصوبوں کے خلاف ایسی حکمت عملی کا مظاہرہ کیا جس نے ناصرف غزہ کے مظلوموں کو پہلے سے زیادہ طاقت ور کیا بلکہ اقوام عالم کے سامنے بھی اسرائیلی بربریت کے مقابل نہتے فلسطینیوں کے حقوق کا پرچار کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ چمن بارڈر پر بھی ہمارے پاکستانی توجہ کے طلبگار ہیں، ان کی بات سنی جائے بات کی جائے اس سے پہلے کہ لوگ اس ظلم کے نظام سے بغاوت کریں۔ملک اس وقت کسی بھی قسم کی محاذ آرائی کا متحمل نہیں ہوسکتا، ملک کی مقتدر قوتوں کو دانشمندی کا مظاہرہ کرنا ہوگا اور ملک کو کسی بھی قسم کے بحران کا شکار کیئے بغیر عوامی امنگوں کےمطابق فیصلے کرنے ہوں گے۔

وحدت نیوز(اسلام آباد) مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے زیر اہتمام عالم اسلام کے نامور رہنما، مظلومین غزہ کی توانا آواز ،اتحاد بین المسلمین کےعلمبردار اور ہمسایہ برادر ملک ایران کے صدرشہید آیت اللہ ڈاکٹر سید ابراہیم رئیسی اور ان کے رفقاء کی یاد میں ایک تعزیتی ریفرنس کا انعقادکیا گیا۔

تعزیتی ریفرنس سے سربراہ مجلس وحدت مسلمین سینیٹر علامہ راجہ ناصر عباس جعفری، اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر رضا امیری مقدم، پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے سربراہ محمود خان اچکزائی، سربراہ سنی اتحاد کونسل صاحبزادہ حامد رضا، ممبر قومی اسمبلی سردار لطیف کھوسہ، مرکزی رہنما تحریک انصاف عامر ڈوگر، جماعت اسلامی کے مرکزی رہنما سابق سینیٹر مشتاق احمد خان ،جے یو آئی کے رہنماخواجہ مدثر محمود، رہنما عوامی نیشنل پارٹی ساجد ترین، پی ٹی آئی رہنما شائستہ کھوسہ، صدر نیشنل پریس کلب اظہر خان جتوئی، آصف محسود ایم پی اے جنوبی وزیرستان، معروف صحافی و اینکر پرسن مظہر برلاس و سردار ہرمیت سنگھ، چکوال سے ممبر قومی اسمبلی جاوید اقبال، اسلام آباد ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر ریاست آزاد اور اسلام آباد بار ایسوسی ایشن کے صدر شکیل عباسی،صدر انجمن تاجران پاکستان چوہدری محمدکاشف، ایم کیو ایم کے ممبر قومی اسمبلی جاوید حنیف خان، نمائندہ سول سوسائٹی زمرد خان، ممبر قومی اسمبلی ایم ڈبلیو ایم انجینئر حمید حسین، سید ناصر عباس شیرازی، سید اسد عباس نقوی، ملک اقرار علوی سمیت مختلف سیاسی مذہبی، وکلا، میڈیا و سماجی شخصیات نے شرکت اور خطاب کیا۔

سربراہ ایم ڈبلیو ایم پاکستان سینیٹر علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے کہا کہ صدر ابراہیم رئیسی دنیا کے رہنماؤں کے لیے نمونہ عمل تھے، وہ انتہائی زاہد اور سادہ و محنتی انسان تھے، وہ یتیمی، غریبی اور مشکل ترین زندگی کے باوجود محنت سے آگے آئے اور اپنی عوام کی خدمت کی، عوامی خدمت کی بدولت وہ ایرانی عوام کے ہردلعزیز رہنما تھے، جن پر کروڑوں لوگ غمزدہ تھے، مزدوروں اور غریبوں کا ہمنوا و دل جوئی کرنے والے پڑھے لکھے حکیم انسان تھے، چمن بارڈر پر بھی ہمارے پاکستانی توجہ کے طلبگار ہیں، ان کی بات سنی جائے بات کی جائے اس سے پہلے کہ لوگ اس ظلم کے نظام سے بغاوت کریں۔

تحریک تحفظ آئین پاکستان کے صدر محمود خان اچکزئی نے کہا کہ قرآن مجید نے کہتا ہے کہ سچ بولو اور اس ملک میں سچ بولنے پر پابندی ہے، شہید ابرہیم رئیسی کو خراج عقیدت پیش کرنے کی اصل شکل یہ ہے کہ ہم ان کے کام اور مشن کو مکمل کریں، وہ دور اندیش لیڈر تھے انہوں نے پاکستان کی فلسطینی کاز پر واضح پوزیشن کو یقینی بنانے کے لیے دورہ کیا، اگر ہم متحد ہو جائیں تو سامراجی قوتیں یہاں کے وسائل نہیں لوٹ سکتے، ایران سامراجی قوتوں کے خلاف پوری اسلامی دنیا سے آگے بڑھ چکا ہے، خدا انکی مدد و نصرت فرمائے، ہمارے حکمران اس ایشو پر کچھ نہیں کر سکتے۔

سفیر اسلامی جمہوریہ ایران ڈاکٹر رضا امیری مقدم نے کہا کہ شہید رئیسی اور ان کے رفقاء میں کونسی ایسی بات تھی جس پر سب انہیں خراج تحسین پیش کر رہے ہیں وہ انکی تربیت اور فکر سازی ہے جس کی تکمیل جمہوری اسلامی ایران کے نظام نے کی تھی، یہ انقلاب دنیا کے ظالمانہ نظاموں کے خلاف پوری قوت کے ساتھ کھڑا ہے، بانی انقلاب اسلامی حضرت امام خمینی نے امریکہ کو دنیا کا سب بڑا دہشت گرد قرار دیا، ایران کے سترہ ہزار افراد کو قتل کر دیا گیا لیکن ایران نے ان تمام جان لیوا ہتھکنڈوں کو ناکام بنایا اور دیگر تمام مسائل اور رکاوٹوں کے باوجود جن میں پابندیاں شامل ہیں ایران ان سختیوں میں سے سرخرو ہو کر نکلا، ان تمام معاملات میں ہم نے جانی اور مالی قربانیاں دی ہیں اور راہ خدا میں یہ سب مشکلات ہمارے لیے اعزاز کا باعث ہیں، آج ہم میزائل اور ڈرونز بنا رہے ہیں اور استعماری قوتیں حیرت زدہ ہیں، مظلومین جہان کے ساتھ ایران پوری قوت کے ساتھ کھڑا رہے گا اور اس ساری کامیابیوں کا سرچشمہ قرآن کریم کی تعلیمات ہیں۔

سنی اتحاد کونسل پاکستان کے سربراہ صاحبزادہ حامد رضا نے کہا کہ پورے عالم اسلام میں چمکتا ہوا ستارہ تھے، وہ مرد حر تھا، پاکستان کے بے ضمیر حکمرانوں میں یہ طاقت ہے ہی نہیں کہ وہ اس جرآت مند رہنما کی مشترکہ پارلیمنٹ سے خطاب کرواتے،

ممبر قومی اسمبلی سردار لطیف کھوسہ نے شہداء خدمت کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ سید ابراہیم رئیسی ایک وسیع النظر اور حکیمانہ سوچ کے مالک رہنما تھے، جس قدر تباہی اور سفاکیت غزہ میں اسرائیل کی طرف سے کی جا رہی ہے اس پر پوری دنیا مجرمانہ خاموشی اختیار کیئے ہوئے ہے، اسرائیل نے جنگ بندی کے عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو ہوا میں اڑا دیا ہے، صرف ایران فلسطینی کاز پر کھل کر حمایت اور مدد کر رہا ہے، اسرائیل کو عالم اسلام کی طرف سے دو ٹوک پیغام جانا چاہیے کہ وہ فوری طور پر جنگ بندی کرے اور نہتے فلسطینیوں بچوں اور خواتین کا قتلِ عام بند کرے، ایران کے ساتھ دیرینہ گیس پائپ لائن منصوبے کو مکمل کیا جائے اور اپنی توانائی کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے امریکی پابندیوں کو خاطر میں نہ لائے، ہم سب کو ایران کے ساتھ کھڑے ہو کر فلسطینی عوام کا ساتھ دینا چاہیے۔

 پی ٹی آئی کے رہنما عامر ڈوگر نے کہا کہ سید ابراہیم رئیسی کا نقصان پورے عالم اسلام کا نقصان ہے، وہ دنیا کے تمام مظلومین کی حمایت کرنے والے تھے، وہ تمام عالم اسلام کی خودمختاری اور وقار کی بات کرتے تھے، وہ جرآت مندانہ سوچ اور کردار کے مالک تھے، اس سانحے پر ہم سب ایرانی قوم کے ساتھ سوگوار اور غمزدہ ہیں۔شہید سید ابراہیم رئیسی کی شہادت پر ہم سب کے دل دکھی ہیں وہ جس طرح خوبصورت اور وجیہہ شکل وصورت کے مالک تھے اسی طرح وہ اپنے طرز عمل میں بھی عظیم انسان تھے، وہ اسلامی دنیا میں ایک باوقار اور مؤثر ترین رہنما تھے، فلسطینی مظلومین اور کشمیری حق خودارادیت پر انکا مؤقف واضح اور مضبوط ترین ہے، اگر پاکستان کی توانائی کی ضروریات کو پورا کیا جائے تو تمام مسائل ہمارے حل ہو سکتے ہیں اور اس کا انہوں نے ہمیں تعاون کا یقین دلایا، انہوں نے اپنے دورہ پاکستان میں فلسطینی اور کشمیری حمایت اور استعماری طاقتوں کے خلاف عوام کے دل و دماغ کے تاروں کو چھیڑ دیا۔

Page 4 of 1474

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree